Al-Shifa Naturla Herbal Laboratories (Pvt), Ltd.    HelpLine: +92-30-40-50-60-70

خود لذتی کے انتہائی خطرناک نقصانات

خود لذتی کے انتہائی خطرناک نقصانات
جلق مشت زنی کے اسباب
اپنے ہی ہاتھ سے اپنے عضوخاص کو بار بار حرکت دینے  ملنے اور سہلانے سے عضو خاص میں انتشار اور ہیجان پیدا کر کے منی خارج کر دینے کا نام جلق یا مشت زنی ہے
جلق مشت زنی کے اسباب
جلق کی عادت کا اصل سبب اور محرک تو جنسی جذبات کا ہیجان و اشتعال ہے مگر اس کے بتانے اور سکھانے والے ہم عمر دوست اور ساتھی ہوتے ہیں ایک بار یہ عمل کرنے کے بعد اس کی لذت بار بار کرنے پر مجبور کردیتی ہے
جلق مشت زنی کے نقصانات
عضو خاص کو ہاتھ کی رگڑ پہنچنے سے اس کی ساخت خراب ہو جاتی ہے عضو خاص سکڑ کر چھوٹا رہ جاتا ہے اعصاب ڈھیلے پڑ جاتے ہیں جس کی وجہ سے بوقت صحبت ان میں پوری ایستادگی اور سختی پیدا نہیں ہوتی جڑ پتلی پڑ جاتی ہے رگیں پھول کر موٹی ہو جاتی ہیں آنکھوں کے چاروں طرف سیاہ گھیرہ بن جاتا ہے چہرہ بدنما بے رونق اور پیلا پڑ جاتا ہے اداسی اور پست ہمتی آ گھیرتی ہے اور کبھی کبھی خود کشی کی خواہش ہونے لگتی ہے رفتہ رفتہ عضو کی حس تیز ہو جانے کی وجہ سے شہوت جلد غالب ہو جاتی ہے اس گندی عادت کے برے نتائج بہت دور تک جاتے ہیں کبھی کبھی اس کے مریض مرگی اور تپ دق میں مبتلا ہو جاتے ہیں، پاگل پن کے شکار ہوجاتے ہیں. اور ہڈیوں کا دھانچہ بننا شروع ہوجاتا ہے بیوی کے قابل نہیں رہتا.شرمندگی کا منہ دیکھنا پڑتا ہے، لیکن یہ لا علاج مرض نہیں ہے ان شاء اللہ مریض قابل عورت بن سکتا ہے مرد کامل بن سکتا ہے بشرطِ کہ مکمل صبر کے ساتھ علاج کرے اللہ  کو حاضر ناظر کر کے توبہ کرے اچھے لوگوں کی صحبت اختیار کرے صوم و صلوۃ کی پابندی کرے باوضو رہے  گندی فلموں سے بچے  اور ذکر اذکار میں دل لگائے اور علماء وصلحا کی محفل میں شرکت کرے سوتے وقت سونے کے اذکار کی پابندی کرے، دائیں کروٹ پہ سوئے اور منہ کے بل اوندھا مت لیٹے؛ کیونکہ نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے اس طرح لیٹنے سے منع فرمایا ہے،اگر انسان اس گناہ میں ملوث ہو بھی جائے تو فوری توبہ استغفار کر لے، نیکی کرے ، مایوسی اور اداسی کا شکار نہ ہو، کیونکہ یہ کبیرہ گناہوں میں سے ہے
مشت زنی یعنی ہاتھ سے مادہ گرانے کے جسمانی نقصانات
اس فعل شنیع وقبیح کا سب سے بڑا نقصان جنسی غدود کو متحرک کرنے کا سبب بن جاتا ہے جس کے نتیجہ میں جنسی غدود زیاده کام کرنے لگتا هے اور یه اس کی نامناسب فعالیت کا سبب بن جاتاہے ـ اس کے اثرات، من جملہ غدود وذى میں ورم، نطفہ کی نالی میں ورم، پیشاب کی نالی میں ورم، آلہ تناسل کا فالج ہونا، بے اختیار منی کا نکل جانا، منی کا جلدی نکل جانا، ہمبستری کی بیماریاں اور بانجھـ ہونا و غیره شامل ہیں
اس کے علاوه سب سے بڑا نقصان
عضو خاص کا پتلا اور چھوٹا ہونا ہے،اس کے علاوه،بینائی کی کمزوری،پچکے گال زرد چہرہ، پٹھوں کی کمزوری ، بدن کا دبلا اور پتلا ہونا، سردرد اور چکر آنا، باربار زکام میں مبتلا ہونا، خون کی کمی،زانو کا سست ہونا، آنکھوں کے گرد سیاہی پیدا ہونا، چہرے کا زرد ہونا، شنوائی میں کمزوری اور اختلال کا پیدا ہونا چہرے پردانے نکلنا، نیند میں اختلال پیدا ہونا،اس فعل کی شدت کی صورت میں اذیت و آزار پهنچنا،جلق کے اور بھی بہت سارےنقصانات شمار کئے گئے ہیں
نفسانی نقصانات
حافظہ کی کمزوری، حواس باختہ ہونا اور تمرکز فکری کی ناتوانی سے دوچارہونا، اضطراب، خوف اور پریشانی ان خصوصیات میں سے ہیں جو مشت زنی کرنے والے کو نهیں چھوڑتی ہیں، وه ہمیشہ وسواس اور تذبذب کی حالت میں رہتا ہے، دل شکستگی، مردہ دلی، دل شکستگی کے نمایاں علامات میں سے، بے احساسی بے تفاوتی، بد ذوقی، سستی، گوشہ نشینی، غم و اندوه، ہنر، ورزش اور معنوی امورمیں عدم دلچسبی ہے جھگڑا کرنا اور بد اخلاقی، مشت زنی کرنے والا ما حول کی معمولی تحریک کے مقابلہ میں حساس ہوتا،دوسروں سے گفتگو کرنے کا حوصلہ نهیں رکھتا ہے، جلدی رنجیده ہوتا ہے، فوراً آپے سے باهر ہوتا ہے اور روشنی، آواز اور رفت و آمد کے مقابلہ میں غیر معمولی حساسیت دکھا تا ہے، زندگی سے ناامید ہونا،قوت تخلیق کی نابودی، استعدادوں اور توانائیوں کو ہاتھ سےدھو دینا،تعلیم، مطالعہ علمی تحقیقات اور،فکری سرگرمیوں کى رغبت کو کھودینا ہوس رانی اور بے راه روى کا شکار ہونا اور ناجائز جنسی تعلقات کا عادی ہونا،جذبات کا فقدان اور شر میلاہو جانا،خود اعتمادى کا فقدا ن اور احساس کمتری، اور قوت فیصلہ کو کھودینا اگر جلق کے سبب سے منی خارج ہوتی ہے اوراس کے اس قدر روحی و حسمانی نقصان ده او برے اثرات هیں تو ازدواج میں بھی یهی مادہ نکلتا هے، پس ازدواج میں اس کے جسمانی نقصانات کیوں نهیں ہیں
یہ سوال پوچھا ہے کسی دوست نے
جلق انسان کی ضرورت کو حقیقی صورت میں مکمل نهیں کرتا ہے اور حاجت روائی کا ایک کاذب طریقہ ہے یعنی انسان کی شهوانی خواہش صرف منی نکلنے سے ہی پوری نہیں ہوتی  بلکہ یہ عمل عشق، جذبات اور انس و محبت کے ساتھ ہونا چاہیئے اور اسی لئے جو یہ فعل انجام دیتے ہیں اپنے اندر کمی اور نقص کا احساس کرتے ہیں اور ممکن ہے یہ کام روحی اور جسمی بیماریوں کا سبب بنے لیکن ازدواج، چونکہ فطری اور حقیقی طور پر شهوانی خواہش گو پورا کرنے کا طریقہ ہے، اس لئے اس کے مفید اثرات اور بهت سے فائدے ہیں
بالفرض ہم تصور کریں کہ یہ دونوں فعل یکساں ہیں اور ان میں کوئی فرق نہیں ہے لیکن پھر بھى یہ دلیل نہیں بن سکتی ہے کہ ان کی ماہیت حقیقت میں ایک ہی ہوگی  تجرباتی علوم اور انسانی علم و دانش نے با وجود اس کے کہ کافی ترقی کی ہے، لیکن اس قدر ترقی نہیں کی ہے کہ اس قسم کے امور کے تمام مصالح و مفاسد اور نفع و نقصانات کو معلوم کرسکیں  اللہ جس نے انسان کو پیدا کیا ہے اور اس کی تمام خصوصیات اور حالات کے بارے میں مکمل طور پر آگاه ہے، نے ان ہی خصوصیات کے پیش نظر، ایک عمل، اگرچہ دوسرے عمل سے بظاہر کوئی فرق نهیں رکھتا، حلال اور واجب قرار دیا ہے اور دوسرے کو حرام اور ممنوع قرار دیا ہے
تفصیلی جوابات
فقهی لحاظ سے یہ بات مسلم اور یقینی ہے کہ جلق گناه اور حرام ہے اور گناه میں کچھـ نقصانات ہیں جو آسانی کے ساتھـ قابل تلافی نہیں ہوتے اور اگر گناه کی وجہ سے انسان کو کوئی نقصان نہیں پہنچتا تو وه عمل اسلام کے شرع مقدس میں گناه کے عنوان سے معرفی نہیں ہوتا، اگر چہ ممکن ہے انسان گناه کے تمام برے اور تخریبی، اثرات کے بارے میں کافی علم نہ رکھتا ہو یا اپنے ناقص علم پر بھروسہ کرکے گمان کرے کہ اسے تمام مجہولات کے بارے میں علم حاصل ہواہے
لیکن جلق کے گناه اور حرام ہونے کے بارے میں متعدد روائیتیں دلالت کرتی ہیں
رسول خدا صلی الله علیه و آله و سلم نے فرمایا ہے خدا، ملائکہ اور تمام انسانوں کی لعنت ہو اس شخص پر جو مشت زنی کرے
اس کے علاوه امام صادق علیہ السلام نے فرمایا مشت زنی کرنے والے کے لئے قیامت کے دن دردناک عذاب ہے
امام صادق علیه السلام سے جلق کے بارے میں سوال کیا گیا، تو حضرت (ع) نے فرمایا اس کی مثال اس شخص کی جیسی ہے جس نے اپنے آپ کے ساتھـ نکاح (ازدواج) کیا ہے، اگر ہم ایسا فعل انجام دینے والے کو پہچان لیں تو اس کے ساتھـ کهانا نہیں کھا ئیں گے حدیث کا راوی پوچھتا ہے کہ قرآن مجید میں کهاں پر اس حکم کو سمجھاجا سکتا ہے آپ (ع) نے فرمایا اس آئیت میں (و من ابتغی وراء ذٰلک فاولئک هم العادون) جو شخص اپنی بیوی اور کنیز کے علاوه اپنی شہوت کو رفع کرے گا وه متجاوز ہے راوی نے پوچھا، زنا بڑا گناه ہے یا جلق حضرت (ص) نے فرمایا، جلق ایک بڑا گناه ہے
لیکن اس بارے میں گناه کے اہم نقصانات ہوتے ہیں جو آسانی کے ساتھـ قابل تلافی نہیں ہیں، قابل توجہ بات ہے کہ اولاً، گناه اعضا و جوارح سے دل کی طرف بڑہتے ہیں، پس گناه قلب و دل کو ضرر پہنچاتا ہے ـ قرآن مجید میں ارشاد الهٰی ہے، ان کے برے اعمال زنگ کے مانند ان کے دلوں پر بیٹھـ گئے ہیں، اس لئے وه حقیقت کو درک نہیں کرسکتے (کلّا بل ران علی قلوبھم ما کانوا یکسبون) مذکوره آیه میں لفظ  ران  زنگ کے معنی  ہے گناه کا بدترین اثر دل کو تاریک کرنا اور نور علم اور حس تشخیص کو نابود کرنا ہے
حضرت علی علیه السلام فرماتے ہیں، دلوں کے لئے گناه سے دردناک تر کوئی بیماری نهیں ہے
ثانیاً، دل کی بیماری سب سے اہم بیماری شمار ہوتی ہے، کیونکہ انسان کے وجود کا کوئی بھی پہلو قلب و دل کے برابر کارآمد، قابل قدر ، حساس اور پر لطف نہیں ہے ، اس بیماری کے بارے میں مختلف تعبیریں بیان کی گئی ہیں، قلب بیمار، قساوت قلب، زنگار فلب، دل کا اندھا ہونا، دل پر مُہرلگ جانا، دل پر قفل لگ جانا اور آخر کار سب سے اہم دل کا مرجاناہے ، جب برتن الٹاہوتا ہے تو اس میں کوئی چیز نہیں رکھی جاسکتی، دل بھی گناه کے نتیجہ میں اسى طرح الٹا ہوتا ہے جیسے علم و حقیقت اس میں سما نہیں سکتی ہے لیکن اس مطلب کے بارے میں ہے حقیقت میں ازدواج اور مشت زنی کے درمیان کیا فرق ہے
انسان میں ایک پوشیده طاقت جنسی شہوت ہے، اسے صحیح صورت میں پورا کیا جانا چاہیئے اور اس کا صحیح طریقہ کار ازدواج ہے، جو شہوانی خواہشات کو پورا کرنے کی فطری اور حقیقی راه ہے اور اسی لئے اس میں مفید اثرات اور بہت سے فوائد ہیں
ازدواج، آرام و سکون اور مرد وعورت کے درمیان مہر و محبت کا وسیلہ ہے اس کے علاوه ازدواج سے جنسی شہوت پر کنٹرول کیا جاسکتا هے، جوان کا مضطرب روح اعتدال و آرام پیدا کرتا ہے اور وه زندگی کے حقائق کو درک کرتا ہے لیکن چونکہ جلق خلاف فطرت ہے، اس لئے انسان کی ضرورت کو حقیقی صورت میں پورا نہیں کرتا بلکہ کاذب صورت میں پورا کرتا ہے، چونکہ انسان کی شہوانی خواہش صرف منی خارج ہونے سے پوری نهیں ہوتی ، بلکہ یہ عشق، جذبہ اور انس و محبت کے ساتھـ ہونا چاہیئے اس لئے جو افراد اس فعل کے مرتکب ہوتے ہیں وه اپنے اندر کمی اور نقص کا احساس کرتے ہیں ممکن ہے اس کا نتیجہ جسمانی اور روحانی بیماریاں ہوں
یہاں پر ہم اس خلاف اخلاق عمل کے بعض نقصانات کی طرف اشاره کرتے ہیں
مشت زنی، جلق، کے جسمانی نقصانات
بعض اطباء جلق کے جسمانی نقصانات کے بارے میں ماننے ہیں کی یہ کام جنسی غدود کو متحرک کرنے کا سبب بن جاتا ہے جس کے نتیجہ میں جنسی غدود زیاده فعالیت کرنے لگتے ہیں اور یہ اس کی نامناسب فعالیت کا سبب بن جاتاہے، اس کے اثرات، میں جملہ غدود وذى میں ورم، نطفہ کی نالی میں ورم، پیشاب کی نالی میں ورم، آلہ تناسل کا فلج، پتلا کمزور ڈھیلا ہونا، بے اختیار منی کا نکل جانا، منی کا جلدی نکل جانا، ہمبستری کی بیماریاں اور بانجھـ ہونا و غیره شامل ہیں اس کے علاوه
آنکھوں کی بینائی کی کمزوری
چہرے کا دبلا ہونا، گالوں کا پچک جانا
پٹھوں کی کمزوری
بدن کا دبلا اور پتلا ہونا
 سردرد اور چکر آنا
 باربار زکام میں مبتلا ہونا
 خون کی کمی
زانو کا سست ہونا
آنکھوں کے گرد سیاہی پیدا ہهونا
چہرے کا زرد ہونا
شنوائی میں کمزوری اور اختلال کا پیدا ہونا
چہرے پردانے نکلنا
نیند میں اختلال پیدا ہونا
اس فعل کی شدت کی صورت میں اذیت و آزار پہنچنا
وظیفہ زوجیت، ہمبستری، مباشرت ادا کرنے کی نااہلیت
قوت مدافعت کی کمی کے باعث جلد مختلف امراض کا شکار ہوجانا
جلق کے اور نقصانات شمار کئے گئے ہیں
نفسیانی نقصانات
حافظہ کی کمزوری، حواس باختہ ہونا اور تمرکز فکری کی ناتوانی سے دوچارہونا
اضطراب، خوف اور پریشانی ان خصوصیات میں سے ہیں جو مشت زنی کرنے والے کو نہیں چھوڑتی ہیں، وه ہمیشہ وسواس اور تذبذب کی حالت میں رہتا ہے
دل شکستگی، دل شکستگی کے نمایاں علامات میں سے، بے احساسی بے تفاوتی، بد ذوقی، سستی، گوشہ نشینی، تنہائی، غم و اندوه، ہنر، ورزش اور معنوی امور عدم دلچسبی ہے
جھگڑا کرنا اور بد اخلاقی، مشت زنی کرنے والا ما حول کی معمولی تحریک کے مقابل، میں حساس  ہوتا ہے، دوسروں سے گفتگو کرنے کا حوصلہ نہیں رکھتا ہے، جلدی رنجیده ہوتا ہے، فوراً آپے سے باهہر ہوتا ہے اور روشنی، آواز اور رفت و آمد کے مقابلہ میں غیر معمولی حساسیت دکھا تا ہے
زندگی سے ناامید ہونا
قوت تخلیق کی نابودی، استعدادوں اور توانائیوں کو ہاتھـ سے دینا
تعلیم، مطالعہ علمی تحقیقات اور فکری سرگرمیوں کى رغبت کو کھودینا
ہوس رانی اور بے راه روى کا شکار ہونا اور ناجائز جنسی تعلقات کا عادی ہونا
جذبات کا فقدان اور شر میلان جانا
خود اعتمادى کا فقدا ن اور احساس کمتری، اور قوت فیصلہ کو کھودینا
دل کی صفائی کو کھودینا اور معنوی امور، دعا کی مجالس اور جماعت میں شرکت کرنے میں عدم دلچسبی و غیره دکھانا
احساس گناه، ضمیر کی ملامت
اجتماعی نقصانات
مشت زنی، انسان میں اجتماع سے دوری اختیار کرنے کی حس ایجاد کرتی ہے اور تکرار اور افراط کے نتیجہ میں ، اپنی جڑیں مضبوط کرتی ہے ایسا انسان گوشہ نشینی اختیار کرنے کے نتیجہ میں زوال سے دوچارہوتا هے اور خیالات کی دینا میں غرق ہوتا ہے، ذاتی لذتوں کی طرف توجہ کرنا، اجتماعی روابط میں سستی ایجاد ہونے کا سبب بن جا تا ہے اور ایسا انسان اجتماعى زندگی کو خطره میں ڈالتا ہے ان (جسمانی، نفسیاتی اور اجتماعی) نقصانات کے بارے میں بھی ذکر کرنا ضروری ہے کہ علوم تجربی اور انسان کے علم و دانش، میں تمام ترقیوں کے با وجود انسان اس قدر ترقی نہ کر سکا اس قسم کے امور کے بارے میں تمام مصالح و مفاسد اور یا فوائد اور نقصانات سے آگاہی حاصل کرسکے اور جو کچھـ اس سلسلہ میں بعض اطباء نے بیان کیا ہے، وه حقیقت میں احتمالی آثار ہیں شاید کہا جائے اس برے عمل کی شدید عادت کی صورت میں رونما ہوتے ہیں اور جلق کے بارے میں ان آثار کو بیان کرنے اور ازدواج کے بارے میں بیان نہ کرنے کی دلیل، یہ لگھتى ہے کہ جلق ایک غیر فطری عمل ہے اور یہ سبب بن جاتا ہے کہ انسان اپنے نفس پر کنٹرول کو کھودے اور شدید صورت میں اس فعل کا عادی بن جائے، لیکن ازدواج ایک فطری عمل ہے اور یه عمل انسان کو تعادل بخشتا ہے، اور اس کے نتیجہ میں اس کی طاقت بڑھ جاتى ہے اور وه اپنے نفس پر زیاده کنٹرول کر سکتا ہے، جلق، مشت زنی، اور اسکے نقصانات سے بچنے کیلئے مکمل علاج 2 ماہ کا ہے آپ کو ایک بہترین کورس ملے گا جوآپ کی زندگی میں کھوئی ہوئی طاقت اور جوانی بحال کر دے گا

دوا خود بنا لیں یاں ہم سے بنی ہوئی منگوا سکتے ہیں
میں نیت اور ایمانداری کے ساتھ اللہ کو حاضر ناضر جان کر مخلوق خدا کی خدمت کرنے کا عزم رکھتا ہوں آپ کو بلکل ٹھیک نسخے بتاتا ہوں ان میں کچھ کمی نہیں رکھتا یہ تمام نسخے میرے اپنے آزمودہ ہوتے ہیں آپ کی دُعاؤں کا طلب گار حکیم محمد عرفان
ہر قسم کی تمام جڑی بوٹیاں صاف ستھری تنکے، مٹی، کنکر، کے بغیر پاکستان اور پوری دنیا میں ھوم ڈلیوری کیلئے دستیاب ہیں تفصیلات کیلئے کلک کریں
فری مشورہ کیلئے رابطہ کر سکتے ہیں

Helpline & Whatsapp Number +92-30-40-50-60-70

Desi herbal, Desi nuskha,Desi totkay,jari botion se ilaj,Al shifa,herbal

Read More

No Comments اسلام، اسلامی، معلومات, جریان، احتلام، کیلئے جڑی بوٹیوں سے، دیسی علاج, جنرل معلومات، اور ہیلتھ ٹپس, دیسی طریقہ علاج، جڑی بوٹیاں، ہربل حکیم, ذکاوت حس کے علاج، کیلئے مختلف دیسی نسخہ جات, سرعت انزال کیلے، دیسی علاج, عضو خاص کیلئے طلاء، تیل، آئل، روغن، دیسی علاج, عضو خاص کیلئے طلاء، تیل، آئل، روغن، مالش، دیسی علاج, مادہ تولید، منی، کا جڑی بوٹیوں کیساتھ، دیسی علاج, مجرب چٹکلے، دیسی ٹوٹکے، مختلف امراض کیلئے, مردانہ سیکس ٹائمنگ،مجرب نسخہ جات, مردانہ کمزوری، کا جڑی بوٹیوں کیساتھ، دیسی علاج, مردوں سے متعلقہ، تمام امراض کا، دیسی علاج, مردوں کے مخصوص مسائل، اور ان کا حل, مردوں،کے،امراض مخصوصہ،کیلیے، مختلف، دیسی، نسخہ جات, مروں ، اور عورتوں کیلئے، جنسی تعلیم معلومات, مشت زنی، ہاتھ رسی، ماسٹر بیشن کا، دیسی علاج , , , , , , ,

ناف اور ناک میں تیل لگانے کے فوائد

ناف اور ناک میں تیل لگانے کے فوائد
ناف میں تیل لگانے کے فوائد
چہرے کے حُسن و جمال کیلئے اور جن کے ہاتھ پاؤ،ں چہرہ، ہونٹ، باچھیں پھٹ جاتی ہوں، وہ ناف میں تیل لگائیں، ذہنی ٹینشن، سٹریس، اینگزائٹی کے لئے نفسیاتی بیماریوں کا بڑا تعلق ناف سے ہے۔
ناک کو چکنا رکھنے کے فوائد
ڈپریشن، اکتاہٹ، بے چینی، پٹھوں اوراعصابی کھچاؤ، ذہنی تناؤ، ہر وقت کا غصہ، نیند کی کمی، گھریلو جھگڑے، میاں بیوی کی ہر وقت چخ چخ، یاد داشت کی کمی، سوچنا کیا کہنا کیا کر کچھ رہے کہہ کیا رہے ٹوٹا جسم ہر وقت جی چاہنا مجھے کوئی دبائے پنڈلیوں کا درد، کمر دردکیلئے ناک کو چکنا رکھنا بے حد مؤثر ثابت ہاتا ہے جو خواتین حُسن و جمال چاہتی ہیں اور جو مرد وقت سے پہلے بوڑھا نہیں ہونا چاہتے وہ اپنے ناک کو دن میں تین بار سرسوں کے تیل سے چکنا ضرور کریں اسکے ساتھ صبح نہار منہ کھجور لازمی استعمال کریں

Anxiety اینگزائٹی کا، روحانی علاج

اینگزائٹی اکثریت کا مسئلہ بن چکی ہے میرا تجربہ اور مشاہد ہ یہ کہتا ہے کہ جو لوگ فطری نیند کو فطری اوقات میں پورا نہیں کرتے انہیں اسکا زیادہ سامنا کرنا پڑتا ہے۔فطری نیند کے اوقات نماز عشاءسے نماز فجر تک کے ہیں۔ اس نیند کو پورا کرنا صحت کی بحالی کا باعث بن جاتا ہے اور اینگزائٹی کم یا ختم ہوجاتی ہے۔اینگزائٹی کو روحانی طور پر ختم کرنے کا ایک مجرب طریقہ ہے ،خاص طور پر ایسے افراد جنہیں امتحانات کا سامنا ہے یا ان کی جاب کی نوعیت ایسی ہے کہ کسی صورت حال کا سامنا کرنا پڑے تو وہ اینگزائٹی کا شکار ہوجاتے ہیں تو انہیں سورہ مومنون کی آخری چار آیات والا روحانی عمل شروع کرنا چاہئے تین بار ان آیات مبارکہ کو پڑھ کر بائیں کان میں پھونکنا چاہئے ۔مرض کی نوعیت کے مطابق ہفتہ میں ایک سے تین بار عمل کافی ہے۔جو لوگ یہ عمل کرتے ہیں ان کے مطابق انکی اینگزائٹی ختم ہونا شروع ہوجاتی ہے۔

دوا خود بنا لیں یاں ہم سے بنی ہوئی منگوا سکتے ہیں
میں نیت اور ایمانداری کے ساتھ اللہ کو حاضر ناضر جان کر مخلوق خدا کی خدمت کرنے کا عزم رکھتا ہوں آپ کو بلکل ٹھیک نسخے بتاتا ہوں ان میں کچھ کمی نہیں رکھتا یہ تمام نسخے میرے اپنے آزمودہ ہوتے ہیں آپ کی دُعاؤں کا طلب گار حکیم محمد عرفان
ہر قسم کی تمام جڑی بوٹیاں صاف ستھری تنکے، مٹی، کنکر، کے بغیر پاکستان اور پوری دنیا میں ھوم ڈلیوری کیلئے دستیاب ہیں تفصیلات کیلئے کلک کریں
فری مشورہ کیلئے رابطہ کر سکتے ہیں

Helpline & Whatsapp Number +92-30-40-50-60-70

Desi herbal, Desi nuskha,Desi totkay,jari botion se ilaj,Al shifa,herbal

اطباء، حکماء، صاحبان خواص کی نظر جسمانی علاج کا روحانی حل

اطباء، حکماء، صاحبان خواص کی نظر جسمانی علاج کا روحانی حل
استخارہ، آسان ترین عمل استخارہ
ہر قسم کےسوالات کے انشا اللہ سوفیصد درست جوابات
اس استخارہ کو هدایت نامہ ایزدی
(یعنی بشارت خداوندی) بھی کہتے  ہیں سوال جیسا بھی ہو جس مرض وعلاج سے معتلق ہو جامع اور واضع جواب ضرور ملتا ہے یہ عظیم ترین عمل اپنی مثال آپ ہے. اسکے لیے نہ تو وقت کی قید ہے اور نہ ہی لمبے چوڑے پرهیز کی ضرورت ہے جہاں ضرورت محسوس ہو اس عمل کو انجام دیں  خواب میں اپکے مسائل کا حل دوا علاج یا اس سے منسلک ذریعہ سامنے آ جائے گا۔ بس جو حکم ملے اس کے مطابق عمل کیجئے کبھی زندگی میں ناکام نہی ہونگے  عمل استخارہ نوٹ کیجئے
سونے سے پهلے گلاب موتیا چنبلی یا نیلو فر کے دو پھول لیجئے ان پر سورت الحمد 14بار سورت توحید 14 بار یا اللہ یا ظاهریا باطن 14 بار پڑہیں اور پُھونک دیں. اب ان پُھولوں کو اپنےسرهانے کےنیچے رکھ کے سو جائیں اسی رات خواب ائے گا جس میں آپکے سوال اور مسائل کا حل بند ہوگا
جہاں تک اس عمل کی حقیقت کا تعلق ہے تو یہ میرا آزمودہ اور مجرب عمل ہے .اسے افراد جو روحانیات کی صداقت پہ یقین نہی رکهتے ذرا اس عمل کو آزما کے دیکھیں یہ عمل کامیاب بهی ہے لاجواب اور آسان بھی ہے اس عمل کی اجازت عام ہے
نوٹ فرمائیں
عمل با طهارت صاف پاک کریں غیر شرعی سوالات مت کریں
عمل سے پهلے 205 روپے صدقہ کسی غریب یتیم بیوہ کو دیں. عمل سے پہلے درود پاک جیتنا ہو سکے تلاوت کیجئے. جس بات کی سمجھ نہ ائے عمل استخارہ سے قبل پوچھ سکتے ہیں

دوا خود بنا لیں یاں ہم سے بنی ہوئی منگوا سکتے ہیں
میں نیت اور ایمانداری کے ساتھ اللہ کو حاضر ناضر جان کر مخلوق خدا کی خدمت کرنے کا عزم رکھتا ہوں آپ کو بلکل ٹھیک نسخے بتاتا ہوں ان میں کچھ کمی نہیں رکھتا یہ تمام نسخے میرے اپنے آزمودہ ہوتے ہیں آپ کی دوعاؤں کا طلب گار حکیم محمد عرفان
ہر قسم کی تمام جڑی بوٹیاں صاف ستھری تنکے، مٹی، کنکر، کے بغیر پاکستان اور پوری دنیا میں ھوم ڈلیوری کیلئے دستیاب ہیں تفصیلات کیلئے کلک کریں
فری مشورہ کیلئے رابطہ کر سکتے ہیں

Helpline & Whatsapp Number +92-30-40-50-60-70

Desi herbal, Desi nuskha,Desi totkay,jari botion se ilaj,Al shifa,herbal

لڑکے اور لڑکیوں کی شادی میں دیر لیٹ کا بڑھتا ہوا خطرناک رجحان

لڑکے اور لڑکیوں کی شادی میں دیر لیٹ کا بڑھتا ہوا خطرناک رجحان
ایک لمحۂ فکریہ
آج سے تقریبًا پندرہ سال پہلے معاشرے کا جو رجحان تھا، اس کے مطابق جس لڑکی کی شادی پچیس سال کی عمر سے پہلے کر دی جاتی، تو ایسی شادی کو بروقت گردانا جاتا، پچیس سال کی عمر کا ہندسہ عبور کرنے کا یہ مطلب لیا جاتا کہ لڑکی کے رشتہ میں دیر ہو گئی ہے، اس سے پہلے کا معلوم نہیں لیکن ہو سکتا ہے کہ دیرکا یہ پیمانہ تین چار سال پہلے تصور کیا جاتا ہو، پھر سات آٹھ سال پہلے یہ صورتحال ہوئی کہ تیس سال کی عمر سے پہلے پہلے لڑکی کی شادی بروقت قراردیئے جانے لگی، یعنی محض سات آٹھ سال میں پانچ سال کا فرق آ گیا
اب بھی ایسے معاملات ہیں کہ اکثر گھروں میں لڑکیوں کی عمریں تیس سے چالیس سال کے درمیان ہو چکی ہیں لیکن رشتہ نہیں یہ رشتہ میں دیر کا رجحان ہمارے معاشرے میں ایسی خاموش دراڑیں ڈال رہا ہے جو معاشرتی ڈھانچے کے زمین بوس ہونے کا پیش خیمہ ہے، لیکن حیف کہ اس کا عملی ادراک معاشرے کے چند لوگوں کو بھی نہیں،
آئیں ؟ اس دیر کی وجوہات کا تعین کرنے کی کوشش کرتے ہیں

مزید پڑھیں

Read More

دل ہمارے جسم کا سب سے بڑا عضو ہے

دل ہمارے جسم کا سب سے بڑا عضو ہے
الشفاء : میری تحقیق اور نظریہ کہ مطابق دل ہمارے جسم کا سب سے بڑا عضو ہے، جس میں دل، خون اور خون کی نالیاں شامل ہے جس کے ذریعے خون تمام جسم میں گردش کرتا ہے، اگر خون کی سپلائی جسم کے کسی حصہ میں رک جائے تب جسم کا وہ حصہ مفلوج ہوجاتا ہے، دل ایک عضلاتی پمپ ہے جو بچے کی پیدائش سے آٹھ ماہ قبل بغیر چھٹی کیے مسلسل چلتا رہتا ہے جبکہ پانی کا پمپ دن میں کچھ وقت چلتی ہے اور اکثر خراب ہو جاتی ہے، لیکن اللہ تعالی کا بنا ہوا پمپ مسلسل تاحیات چلتا ہے، دل کا رک جانا زندگی زندگی کا رک جانا ہے، قرآن و حدیث میں بھی دل کا بہت جگہ ذ کر آیا ہیں، اور بیماری کا ذ مہ دار بھی دل کو ٹھیرایا ہے، دل وہ عضو ،ے جس کا رابطہ خون کے ذریعہ تمام جسم سے ہوتا ہے، حضور نے فرمایا انسان کے جسم میں ایک لوتھڑا ہے اگر وہ درست ہے تو سارا جسم درست ہے اگر وہ خراب یا بیمار ہے تو سارا جسم بیمار ہے آگاہ رہو وہ دل ہے، فی قلوبھم مرضُ، ان کے دلوں میں بیماری ہے، یعنی دل میں خلل یا بگاڑ بیماری کا نتیجہ ہے، رسول اللہ نے فرمایا ہمارے لیے دو مردے حلال ہیں اور دو خون، مردے سے مراد مچھلی اور ٹڈی اور خون سے مراد کلیجی اور تلی ہے، اس کا مطلب کلیجی اور تلی خون ہے، اور یہ بھی دل کا حصہ ہے، میرا یہ نظریہ ہے کہ دل جسم کا سب سے بڑا عضو ہے اور بیماری بھی اس کے افعال میں خرابی کی وجہ سے ہوتی ہے

دوا خود بنا لیں یاں ہم سے بنی ہوئی منگوا سکتے ہیں
میں نیت اور ایمانداری کے ساتھ اللہ کو حاضر ناضر جان کر مخلوق خدا کی خدمت کرنے کا عزم رکھتا ہوں آپ کو بلکل ٹھیک نسخے بتاتا ہوں ان میں کچھ کمی نہیں رکھتا یہ تمام نسخے میرے اپنے آزمودہ ہوتے ہیں آپ کی دوعاؤں کا طلب گار حکیم محمد عرفان
ہر قسم کی تمام جڑی بوٹیاں صاف ستھری تنکے، مٹی، کنکر، کے بغیر پاکستان اور پوری دنیا میں ھوم ڈلیوری کیلئے دستیاب ہیں تفصیلات کیلئے کلک کریں
فری مشورہ کیلئے رابطہ کر سکتے ہیں

Helpline & Whatsapp Number +92-30-40-50-60-70

Desi herbal, Desi nuskha,Desi totkay,jari botion se ilaj,Al shifa,herbal

بیوی سے مباشرت کرنے پر لذت محسوس نہیں ہوتی آخر کیوں؟

سوال:میرا ایک عزیز جو جوان ہے، بر سر روزگار ہے اور اسکی شادی کو صرف 3 سال ہوئے ہیں کچھ عرصے سو وہ افسردہ رہنے لگا ہےبہت زیادہ کریدنے پر پتا چلا ہے کہ اپنی بیوی سے مباشرت کرنے پر اسے لذت محسوس نہیں ہوتی جبکہ وہ اسے بہت چاہتا ہےکیا وہ کسی طریقے سے جنسی لذت میں اضافہ کر سکتا ہے ؟
جواب: ہر شوہر کو چاہیے کہ وہ اپنی جنسی سوجھ بوجھ کو بڑھائے کوئی شخص بھی جنسی لذت حاصل کرنے کے شعور کے ساتھ پیدا نہیں ہوتا بلکہ ایک سمجھدار شوہر اپنی شریکِ حیات کے ردِ عمل سے یہ سب کچھ سیکھتا ہےوہ برابر اپنی اس صلاحیت کو ترقی دینے میں لگا رہتا ہے کہ وہ فریق ثانی کو لذت پہنچائے اور اسکے بدلے میں خود اس سے زیادوہ لذت حاصل کرے.
آپ نے عزیز اور اسکی بیوی کے درمیان اچھے تعلق کا ذکر کیا ہے ہو سکتا ہے کہ انکے درمیان ظاہری نزع نہ ہو یا جھگڑے کم ہوتے ہوں لیکن صحیح طور پر جنسی لذت حاصل کرنے کے لیے اخلاص ، خیر خواہی اور نرم خوئی سب سے زیادہ اہم چیزیں ہیں شادی میں اعلیٰ ترین جنسی لذت کا جزیہ خیال یہ ہے کہ بیوی کو یہ محسوس کرا دیا جائے کہ وہ دلکش ہے.جب تک کے بیوی اس بات سے مطمئن نہ ہو جائے کہ شوہر کی حاجت نہیں بلکہ بیوی کی دلکشی ہے جو شوہر کو جنسی عمل پر آمادہ کرتی ہے، اس وقت وہ اچھی ساتھی نہیں بن سکے گی اور جنسی تعلق بے کیف رہے گا شوہر اور بیوی میں نفسیاتی مطابقت بڑھنی چاہیے. جس سے ایک دوسرے کے لیے ان کی جازبیت میں اضافہ ہوتا ہے مباشرت کے معاملے میں بیوی کا رول کم نہیں ہے. اس کی شرکت ، تعاون، رد عمل اور اپنی پسندیدہ باتوں کی طرف توجہ کرنا جنسی تعلقات کی طرف اعلیٰ پیمانے پر لطف بنانے میں جو ہر کام کرتے ہیں

اطلاع عام

ہمارے تمام ممبرز اور وزٹر کو اطلاع دی جاتی ہے ہماری ویب سائیٹ اور بلاگ
نیو اور زبردست خوبصورت شکل میں کچھ دنوں میں اپ ڈیٹ ہو رہی ہے
ہماری ویب سائٹ صرف یہ ہیں
www.alshifaherbal.com

www.hakeemirfan.com

Our new addition to the Portfolio:

Salient Features:

A reliable source of health articles, optimal wellness products, medical news, and free natural newsletter from natural health expert: Hakeem Muhammad Irfan.
Health Information in Multiple Languages: English,Arabic, Farsi & Urdu.
Approved herbal information and Authentic Research.
Home-made and easy remedies for several ailments – Recipes made with natural ingredients found at home.
Safe and simple Remedies free fromany unwanted side effects.
Written and managed by Hakeem Muhammad Irfan.
My help from International Herbalists Association

AL -shifa ،Natural، Herbal، Laboratories   (Pvt) Ltd

اطلاع عام
الشفاء نیچرل ہربل لیبارٹریز کے ممبران/وزٹرز کو مطلع کیا جاتا ہے کہ کچھ لوگوں نے ہماری ویب سائئٹ اور بلاگ کو کاپی کرکے مختلف ناموں سے بلاگ اور ویب سائیٹ بنائی ہوئی ہیں ۔وہ لوگ دھوکہ فراڈ کر رہے ہیں بے شمار لوگوں کے ہمیں فون آرہے ہیں ہماری ویب سائٹ جب سے بنی ہے جب سے تمام مضامیں پوسٹ ہیں پوسٹ کے ساتھ ویب سائٹ پرتمام تفصیل اور تاریخ سال درج ہے ہماری ویب سائٹ پر تمام مضامین ریسرچ شدہ اور مستند ہیں حکیم محمد عرفان صاحب کی ذاتی محنت اور ریسرچ ہے اسلیے الشفاء نیچرل ہربل کے ممبران/وزٹرز کو مطلع کیا جاتا ہے آپ کو مالی اور جسمانی نقصان ہوسکتا ہے

ہم اللہ کی رضا کے لیے تمام انسانیت کی خدمت و بھلائی کرنے کا عزم کیے ہوئے ہیں
مطلع کرنے کا یہ مقصد ہے کہ جن لوگوں نے ہماری ویب سائیٹ کو کاپی کیا ہوا ہے وہ لوگ آپ کو غلط مشورہ اورغلط ادویات دے سکتے ہیں فائدے کی بجائے اُلٹا نقصان ہوسکتا ہے کیونکہ جب صحت ایک بار خراب ہوجاتی ہے تو دوبارہ ٹھیک ہونے میں بہت ٹائم لگتا ہے اور تکلیف علیحدہ ہوتی ہے
ہمارا ادارہ پراپر سیکورٹی سیکورٹی ایکسچینج کمیشن آف پاکستان سے رجسٹرڈ ہے
الشفاء نیچرل ہربل لیبارٹریز پرائیویٹ لمٹیڈ
www.alshifaherbal.com/urdu
www.alshifaherbal.com
بتانے کامقصد صرف یہ ہے کہ کسی کوبھی نقصان نہ پہنچے
مزید معلومات کے لیے ای میل کریں
info@alshifaherbal.com
آپ کی دعا کا طا لب حکیم محمد عرفان
Helpline  : 00-92-30-40-50-60-70

skyp, id : alshifa.herbal

ہمبستری کے مسائل، قرآن و حدیث کی روشنی میں

ہمبستری کے مسائل، قرآن و حدیث کی روشنی میں
بیوی سے ہمبستری کرنا بھی صدقہ، ثواب ہے, مسلم  2329

Sex style – sex position

میاں بیوی کسی بھی طریقے سے ہمبستری کر سکتے ہیں یعنی کوئی بھی  اپنا سکتے ہیں البقرہ 223، بخاری 4528 ، ترمذی 298
حیض کے دوران ہمبستری کرنا حرام ہے، البقرہ 222
حیض کے دوران غلطی سے ہمبستری کر لینے سے اگر حیض کا خون سرخ ہو تو ایک دینار اور خون زرد ہو تو نصف دینار صدقہ کر دینا چا ہیئے، ترمذی 137
ایک دینار ساڑھے چار ماشے یعنی تقریبا چار گرام کا ہوتا ہے
حیض کے دوران بیوی سے بوس و کنار، ساتھ لیٹنا اور ساتھ کھانا پینا وغیرہ جائز ہے، مسلم 694
نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے بیوی کی دبر (پچھلے سوراخ) میں جماع کرنے والے پر لعنت فرمائی ہے، ترمذی 1165 اور 216
دخول سے دونوں پر غسل واجب ہوجاتا ہے چاہے انزال ہو یا نہ ہو، بخاری 291، مسلم 783، ترمذی 111
ہمبستری کے فورأ بعد غسل کرنا واجب نہیں. اگر سونے کا ارادہ ہو تو استنجا اور وضو کر کے سو سکتے ہیں، مسلم 705، ترمذی 2924
دوسری یا تیسری بار ہمبستری کرنی ہو تو ہر بار درمیان میں غسل کرنا واجب نہیں. استنجا اور وضو کافی ہے ترمذی 140, 14
اگر کسی غیر عورت پر نظر پڑنے سے شہوت پیدا ہوجاۓ تو گھر جا کر اپنی بیوی سے ہمبستری کر لینی چاہیئے، مسلم 3407
بیوی سے عزل کرنا جائز ہے، بخاری 2229
عزل یہ ہے کہ جب آدمی کو انزال قریب ہو تو منی باہر گرا دے تاکہ بچہ پیدا نہ ہو. علماء نے عزل سے استدلال کرنے کے لیئے Temporary Tamily Planning condom  کونڈم کو جائز قرار دیا ہے
حضرت ام سلیم رضی اللہ عنہا کا شیرخوار بچہ فوت ہو گیا, ان کے شوہر گھر آے تو انہوں نے ان کو کھانا دیا، رات کو ہمبستری کے بعد شوہر کو بتایا کہ اپنا بچہ فوت ہو گیا ہے. نبی صلی اللہ علیہ وسلم کو بتایا گیا تو آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے برکت کی دعا دی، مسلم 6322
جب آدمی بیوی کو اپنی خواہش پوری کرنے کے لیۓ بیوی کو بستر پر بلاۓ تو اسے فورأ آجانا چاہیۓ اگرچہ وہ تنور پر (روٹی بنا رہی) ہو یا کسی سواری پر بیٹھی ہو، ترمذی 1169، ابن ماجہ 1853
اگر شوہر کے بلانے سے بیوی بغیر کسی عذر کے نہ آے تو فرشتے ساری رات اس عورت پر لعنت بھیجتے ہیں، مسلم، 3541
خلوت یعنی ہمبستری کی باتیں دوستوں، سہیلیوں کو بتانا حرام ہے، السلسلہ الصحیحہ البانی 46
نوٹ : یہ مسائل تحریر کرنے کی وجہ یہ کہ اکثر لوگ ان سے لا علم ہیں اور بے جاشرم کی وجہ سے علماء سے دریافت بھی نہیں کرتے
انصاری عورتیں نبی صلی اللہ علیہ وسلم سے خود آ کر یہ مسائل دریافت کیا کرتی تھیں. اسی لیۓ اصول یے کہ شرع میں کوئی شرم نہیں
ہر قسم کی تمام جڑی بوٹیاں صاف ستھری تنکے، مٹی، کنکر، کے بغیر پاکستان اور پوری دنیا میں ھوم ڈلیوری کیلئے دستیاب ہیں تفصیلات کیلئے کلک کریں
فری مشورہ کیلئے رابطہ کر سکتے ہیں

Helpline & Whatsapp Number +92-30-40-50-60-70

Desi herbal, Desi nuskha,Desi totkay,jari botion se ilaj,Al shifa,herbal

عید الفطر کی تیاری

عید الفطر کی تیاری
چاند رات : انعام پانے والی رات۔
آقا علیہ الصلاہ والسلام نے فرمایا ہے کہ جس شخص نے عیدین (عید الفطر اور عید الاضحی) کی راتوں کو ثواب کی اُمید رکھتے ہوئے زندہ رکھا (عبادت میں مشغول اور گناہ سے بچا رہا) تو اس کا دل اس (قیامت کے ہولناک اور دہشت ناک ) دن نہ مرے گا، جس دن لوگوں کے دل (خوف وہراس اور دہشت و گھبراہٹ کی وجہ سے) مردہ ہو جائیں گے تو اس رات کو بجائے آتش بازی کرنے یا بازار پھرنے کے ہمیں اللہ کے حضور حاضر رہ کر رمضان المبارک کی محنتوں کا انعام لینا چاہیئے
صدقہ الفطر : سب سے اہم کام جو نماز عید سے پہلے کر لینا سنت ہے۔ وہ فطرانے کی ادائیگی ہے۔ صدقہ فطر رمضان میں ہو جانے والی لغویات اور بے ہودہ کاموں کی طہارت کرتا ہے اور مساکین کی خوراک کا ذریعہ ہے اس لئے اس کو نماز عید سے پہلے پہلے ادا کر دینا چاہیئے۔ اگر کسی عذر کی وجہ اس وقت تک ادا نہ ہو پائے تو زندگی میں جب بھی ادا کریں گے ادا ہی ہو گا ۔ قضا نہیں تمام مالک نصاب خواتین وحضرات پر صدقہ فطرادا کرنا واجب ہے,نابالغ بچوں کی طرف سے بھی ان کے ولی پر فطرانہ ادا کرنا واجب ہے۔ چاہے وہ بچہ عید کی صبح ہی پیدا ہوا ہو نماز عید کی تیاری کے سلسلے میں اپنے ناخن تراشیں، مسواک کریں، غسل فرمائیں، نئے کپڑے ہوں تو وہ پہنیں یا دھلے ہوئے اچھے کپڑے زیب تن فرمائیں۔۔۔ خوشبو لگائیں۔۔۔ فجر کی نماز محلے کی مسجد میں با جماعت ادا فرمائیں اور کوشش کریں کہ عید گاہ جلد پہنچ جائیں۔
عیدالفطر کے دن کچھ کھا کر نماز کے لئے تشریف لے جائیں۔۔۔ اگر کھجوریں دستیاب ہوں تو طاق عدد میں کھجوریں کھا لیں یا پھر اور کوئی میٹھی چیز بھی کھا سکتے ہیں عید گاہ سواری پر جانے میں بھی کوئی حرج نہیں لیکن اگر چل سکتے ہوں تو پیدل جانا افضل ہے۔ ایک راستے سے جائیں اور دوسرے راستے سے واپس آئیں۔ اس طرح مختلف راستے آپ کی عبادتوں کے گواہ بنتے جائیں گے امام بیہقی رحمہ اللہ نے شعب الایمان میں ایک لمبی حدیث نقل کی ہے، جس کے کچھ حصے کا ترجمہ ذیل میں نقل کیا جاتاہے،جس سے چاند رات اور یوم العید میں اللہ تعالی کی طرف سے اس کے بندوں کے ساتھ ہونے والے معاملے کا اندازہ ہو سکتا ہےپھر جب عید الفطر کی رات ہوتی ہے تو  (آسمانوں میں) اس کا نام,  لیلة الجائزة  (انعام کی رات ) سے لیاجاتا ہے اور جب عید کی صبح ہوتی ہے تو اللہ رب العزت فرشتوں کو تمام شہروں کی طرف بھیجتے ہیں، وہ زمین پر اتر کر تمام گلیوں (راستوں )کے سروں پر کھڑے ہو جاتے ہیں اور ایسی آوازسے، جس کوجن و انس کے سوا ہر مخلوق سنتی ہے، پُکارتے ہیں کہ اے امتِ محمدیہ ! اُس ربِ کریم کی(بارگاہ کی) طرف چلو، جو بہت زیادہ عطا کرنے والا ہے اور بڑے سے بڑے قصور کو معاف فرمانے والا ہے،پھر جب لوگ عید گاہ کی طرف نکلتے ہیں تو حق تعالی شانہ فرشتوں سے دریافت فرماتے ہیں :کیا بدلہ ہے اُس مزدور کا جو اپنا کام پورا کر چکا ہو؟وہ عرض کرتے ہیں کہ اے ہمارے معبود اور مالک ! اس کا بدلہ یہی ہے کہ اس کو اس کی مزدوری پوری پوری ادا کر دی جائے،تو اللہ تعالی ارشاد فرماتے ہیں, فإني أشھدکم یا ملائکتي! إنيقد جعلتُ ثوابھم من صیامھم شھر رمَضان وقیامھم رضائي ومغفرتي، فرشتو! میں تمہیں گواہ بناتا ہوں کہ میں نے ان کو رمضان کے روزوں اور تراویح کے بدلہ میں اپنی رضا اور مغفرت عطا کر دی، اور پھر آپ بخشے بخشوائے اپنے گھروں کو لوٹیں گے ان شاءاللہ

زنا سے بچنے کا, بہترین نسخہ

زنا سے بچنے کا بہترین نسخہ

حدثنا عبدان،‏‏‏‏ عن أبي حمزة،‏‏‏‏ عن الأعمش،‏‏‏‏ عن إبراهيم،‏‏‏‏ عن علقمة،‏‏‏‏ قال بينا أنا أمشي،‏‏‏‏ مع عبد الله ـ رضى الله عنه ـ فقال كنا مع النبي صلى الله عليه وسلم فقال ‏”‏ من استطاع الباءة فليتزوج،‏‏‏‏ فإنه أغض للبصر وأحصن للفرج،‏‏‏‏ ومن لم يستطع فعليه بالصوم،‏‏‏‏ فإنه له وجاء ‏”‏‏.‏
ہم سے عبدان نے بیان کیا، ان سے ابوحمزہ نے، ان سے اعمش نے، ان سے ابراہیم نے ان سے علقمہ نے بیان کیا کہ میں عبداللہ بن مسعود رضی اللہ عنہما کے ساتھ جا رہا تھا۔ آپ نے کہا کہ ہم نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کے ساتھ تھے تو آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا اگر کوئی صاحب طاقت ہو تو اسے نکاح کر لینا چاہئے کیونکہ نظر کو نیچی رکھنے اور شرمگاہ کو بدفعلی سے محفوظ رکھنے کا یہ ذریعہ ہے اور کسی میں نکاح کرنے کی طاقت نہ ہو تو اسے روزے رکھنے چاہئیں کیونکہ وہ اس کی شہوت کو ختم کر دیتا ہے۔

کتاب الصیام صحیح بخاری

Copy Protected by Tech Tips's CopyProtect Wordpress Blogs.